حیدرآباد بورڈ طالب علموں میں انعامات کی تقسیم کی تقریب

حیدرآباد: 01 مارچ: ثانوی و اعلیٰ ثانوی تعلیمی بورڈ حیدرآباد کی جانب سے سالانہ امتحانات 2007-2008ء میں سیکنڈری اسکول سر ٹیفکیٹ پارٹ ٹو اور ہائر سیکنڈری سرٹیفکیٹ پارٹ ٹو (دسویں اور بارہویں) جماعت میں نمایاں پوزیشن حاصل کرنے والے طالب علموں میں تقسیم میڈل اور نقد انعامات کی تقریب بورڈ آفس آڈیٹوریم میں منعقد کی گئی۔ تقریب کی صدارت اعلیٰ ثانوی تعلیمی بورڈ کراچی کے چیئرمین پروفیسر انوار احمد زئی نے کی۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انوار احمد زئی نے ملک کی تعلیمی پالیسی سے متعلق کہا کہ 1998ء سے 2010ء تک جو تعلیمی پالیسی بنائی گئی اسے اہداف کی عدم تکمیل کی وجوہات پر خارج کر کے 2009ء میں نئی تعلیمی پالیسی بنائی گئی جس کے تحت 2015ء تک 85 فیصد تعلیمی تناسب کا حدف مقرر کیا گیا جبکہ گذشتہ تعلیمی پالیسی کے تحت 19 برسوں میں تعلیمی تناسب میں صرف 14 فیصد اضافہ ہوا۔ انہوں نے کہا کہ اس موجودہ تعلیمی پالیسی کے لئے جی ڈی پی کا 7.7 فیصد مختص کیا گیا ہے جبکہ پچھلی پالیسی کے تحت 2.1 فیصد تعلیم کے لئے مختص کیا گیا تھا لیکن اس میں بھی صرف جی ڈی پی کا 1.7 فیصد محکمے تک پہنچ سکا۔

شکریہ جنگ